مظفرآباد: اسمبلی سیکرٹریٹ ملازمین کا جائز اور تسلیم شدہ مطالبات کے لئے آج سے تحریک چلانے کا اعلان

رپورٹ: PTUDC آزاد کشمیر

آل سیکرٹریٹ ایمپلائز ایسوسی ایشن کی کال پر 18 فروری سے اسمبلی کے سینکڑوں ملازمین چارٹر آف ڈیمانڈ کے لئے تحریک شروع کرنے کا اعلان کرد یا ہے۔ یہ تحریک جاری کردہ حکومت نوٹیفکیشن پر عملدرآمد تک جاری رہے گی۔

صدر ایمپلائز ایسوسی ایشن شریف اعوان، سیکرٹریٹ ملازمین اور پی ٹی یو ڈی سی آزاد کشمیر کے مرکزی صدر طارق چغتائی کا کہنا تھا کہ، ملازمین اذیت کا شکار ہیں۔ ان کا معاشی قتل کیا جا رہا ہے۔ سیکرٹری اسمبلی آزاد جموں و کشمیر قانون ساز اسمبلی کے ملازمین کو پنجاب اسمبلی کے برابر مراعات دینے آڑے آ گئے ہیں۔ سیکرٹری اسمبلی نے سپیکر اسمبلی کی رٹ کو بھی چیلنج کر رکھا ہے۔ احتجاج کے لئے مجبوراً نکل رہے ہیں۔ اسمبلی کے سامنے دھرنا دیں گے۔ کفن پوش احتجاج کریں گے۔ ملازمین کے حقوق کی جنگ لڑیں گے۔ حکومت سپیکر اسمبلی بے لگام بیوروکریسی کو لگام دے۔

قانون ساز اسمبلی کے ملازمین کا مطالبہ ہے کہ ملازمین فوری طور پر سیکرٹریٹ الاؤنس دیا جائے۔ یوٹیلٹی الاؤنس کا بقایا جات سول سیکرٹریٹ کے نوٹیفکیشن کی طرز پر کیا جائے۔ ایچ بی اے کی مشترکہ سنیارٹی لسٹ کا اجراء کیا جائے۔ شعبہ سکیورٹی کی ترقیابی کا کوٹہ مقرر کیا جائے۔ ڈرائیوران کو ٹائم سکیل دیا جائے۔ اسمبلی ملازمین کے سروس رولز بنائے جائیں۔ اسمبلی سیکرٹریٹ کے ملازمین کو 7 سال سے مراعات نہیں دی گئی۔ پنجاب اسمبلی طرز پر مراعات دی جائیں۔

جاری کردہ دونوں نوٹیفکیشن پر عملدرآمد کر کے ملازمین میں پائی جانے والی بے چینی اور اضطراب ختم کیا جائے۔ بصورت دیگر ملازمین 18 فروری کو باقاعدہ احتجاجی تحریک شروع کریں گے۔

پی ٹی یو ڈی سی ملازمین کےمطالبات کی حمایت کا اعلان کرتی ہے اور ہم بھرپور یکجہتی کا اظہار کرتے ہیں، ان خیالات کا اظہار مرکزی جوائنٹ سیکرٹری چنگیز ملک کی جانب سے جاری ویڈیو پیغام میں کیا گیا۔