پی ٹی وی ملازمین کی حالت زار

رپورٹ: PTUDC

جب سے موجودہ ”تبدیلی سرکار“ مسند اقتدار پر براجمان ہوئی ہے تمام اداروں کے محنت کشوں پر معاشی حملوں کی شدت میں بے تحاشا اضافہ ہوا ہے۔ یہی حال پاکستان ٹیلی وژن کے ملازمین کا ہے۔ جس طرح حکومتی بد انتظامی اور نااہلی ہر شعبے میں نظر آرہی ہے، پی ٹی وی میں بھی یہی حکومتی نااہلی ملازمین کے لیے عذاب مسلسل بن گئی ہے۔ اسی حکومتی نااہلی کی وجہ سے ایک وقت میں تو حکومت کی جانب سے پی ٹی وی کو یکسر بند کرنے کی تجویز بھی دی گئی۔ ادارے کی بیوروکریسی کی اسی بد انتظامی کے خلاف ملازمین کئی مرتبہ سراپا احتجاج رہے ہیں۔ انتظامیہ کی اسی بد انتظامی اور کرپشن کی وجہ سے ادارہ مالی بحران کا شکار ہے جس کا تمام تر بوجھ ادارے کے محنت کشوں اور غریب ملازمین پر ڈالا جا رہا ہے اور حاضر سروس اور ریٹائرڈ ملازمین کی مراعات پر ڈاکہ ڈالا جا رہا ہے۔

پی ٹی وی ملازمین کو منظور شدہ ہاؤس ریکوزیشن میں 50فیصد اضافہ ابھی تک نہیں دیا جا رہا ہے جبکہ ذیلی محکموں ریڈیو پاکستان اور PID کے ملازمین کو یہ اضافہ فراہم کردیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ 2008ء کے بعد مستقل ہونے والے ملازمین کو تاحال پنشن کی سہولیات فراہم نہیں کی جار ہی حالانکہ ان کی مستقلی سپریم کورٹ کے آرڈرز پر ہوئے تھی۔ دوسری طرف عرصہ دراز سے کام کرنے والے عارضی ملازمین کو مستقل نہیں کیا جا رہا ہے۔ ان پر ہر وقت برطرفی کی تلوار لٹک رہی ہے۔ انتظامیہ NIRCکے فیصلوں اور احکامات کو بھی مسلسل نظر انداز کر رہی ہے۔ ان تمام تر ناانصافیوں اور بدانتظامیوں کے خلاف جب ملازمین احتجاج کرتے ہیں تو انہیں انتقامی کاروائیوں کا نشانہ بنایا جاتا ہے۔ اس وقت بھی متعدد یونین رہنما سمیت کئی محنت کشوں کو معطل کیا جا چکا ہے۔  پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDC انتظامیہ کی ان انتقامی مزدور دشمن کاروائیوں کی بھر پورمذمت کرتی ہے اور مطالبہ کرتی ہے کہ فوری طور پر ملازمین کے خلاف انتقامی کاروائیوں کا سلسلہ بند کیا جائے اور پی ٹی وی کے ملازمین کے تمام ترمطالبات کو تسلیم کیا جائے اورمراعات پر ڈاکہ زنی بند کی جائے۔  PTUDC، پی ٹی وی کے محنت کشوں کے لیے ہر سطح پر آواز بلند کرے گی اور تمام تر دیگر اداروں کے محنت کشوں کے ساتھ مل کر بیوروکریسی کی ان ناانصافیوں کے خلاف بھرپور تحریک چلائے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*