اسلام آباد: ریڈیو پاکستان میں جبری برطرفیوں کے خلاف بھر پور جدوجہد کریں گے، محمد اعجاز جنرل سیکرٹری یونائٹیڈ سٹاف آرگنائزیشن

رپورٹ: PTUDC اسلام آباد

پی ٹی آئی حکومت نے اپنی مزدور دشمن روایات کو برقرار رکھتے ہوئے آج ریڈیو پاکستان کے 749 کانٹریکٹ ملازمین کو بیک جنبش قلم گھر بھیجوادیا ہے۔17500 سے 25000 روپے تک تنخواہ لینے والے ان ملازمین میں سے اکثریت گزشتہ بیس سال سے کام کر رہی تھی۔ ڈائریکٹر جنرل عنبرین جان نے دو ماہ قبل 320 کانٹریکٹ ملازمین کو ملازمت سے برطرف کیا تھا، جبکہ اس بار باقی ماندہ 749 کانٹریکٹ ملازمین کے گھروں کے چولہے بجھا دئے گئے ہیں۔ یاد رہے کہ ریڈیو پاکستان میں 4400 منظور شدہ اسامیاں ہیں۔جبکہ مستقل ملازمین کی تعداد بمشکل 2400 ہے۔تقریبا 1000 افراد کانٹریکٹ پر کام کررہے تھے۔ جن کی اکثریت وفاقی حکومت کے مقرر کردہ کم سے کم معاوضہ 17500 روپے ماہانہ پر کام کررہی تھی جبکہ چار ماہ سے تنخواہ بھی نہیں دی گئی۔

اس پر محمد اعجاز جنرل سیکرٹری یونائٹیڈ سٹاف آرگنائزیشن ریڈیو پاکستان نے اپنے جاری بیان میں کہا ہے کہ ریڈیو پاکستان سے 10، 15 سال سے ڈیلی ویجز پر کام کرنے والے ملازمین کو چاروں صوبوں گلگت بلتستان کشمیر و چترال سے نکال دیا گیا ہے۔ یہ ظلم بیوروکریسی نے کیا ہے۔ بیوروکریسی کہتی ہے کہ ریڈیو پاکستان کواس دور میں کون سنتا ہے۔ جناب تھوڑے دن پہلے ہی انڈیا کے وزیر اعظم نے ایک جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ میں ریڈیو پاکستان کے انڈیا کے خلاف ہونیوالے پروپیگنڈہ سے بڑا تنگ ہوں۔ کشمیر کے لیے ریڈیو پاکستان کا تاریخی رول رہا اس کردار کو ہمیشہ ہمیشہ کے لیے ختم کرنے کے لیے ان ملازمین کو ہی نکال دیا جنہوں نے اپنی آدھی عمرقلیل اجرتوں میں قومی ادارے کی خدمت کی۔ اس ظلم ک خلاف سخت مزاحمت کی جائے گی اور ریڈیو چوک پر دھرنا ہوگا۔ اگر وزیر اعظم ہاؤس کے سامنے بھی جانا پڑے تو اس سے بھی دریغ نہیں کریں گے۔ ملازمین کے حقوق کے لئے ہر حد تک جائیں گے اور ہر محاذ پر جدوجہد کی جائے گی۔

آل پاکستان ایمپلائز اینڈ پنشنرز تحریک کے رہبر تحریک محمد اسلم خان اور پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین کے مرکزی چیئرمین نذر مینگل نے اپنے جاری بیانات میں ریڈیو پاکستان میں جبری برطرفیوں کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ حکومت آئی ایم ایف کے ایما پر محنت کشوں پر سخت معاشی حملے کر رہی ہے، تنخواہوں اور مراعات میں کٹوتیاں کی جارہی ہیں اور تمام قومی اداروں سے جبری برطرفیوں کا سلسلہ جاری ہے۔ ہم ریڈیو پاکستان کے ملازمین کے شانہ بشانہ لڑنے کا عہد کرتے ہیں اور ملازمین کے حقوق کے تحفظ کے لئے کسی بھی حد تک جائیں گے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*