میڈیا انڈسٹری میں محنت کشوں کی جبری برطرفیاں نامنظور

رپورٹ: PTUDC

ملک بھر میں میڈیا سے منسلک غریب محنت کشوں کو نوکریوں سے فارغ کیا جا رہا ہے۔ خصوصاً جنگ، ایکسپریس، مشرق اور دوسرے میڈیا مالکان اس وقت تک سینکڑوں محنت کشوں کو بیروزگار کر چکے ہیں۔ جس کی وجہ سے بے روزگار ہوئے محنت کشوں کے گھروں کے چولہے بجھ چکے ہیں۔ اخبارات کے مالکان یہ کہہ رہے ہیں کہ سابقہ حکومت کے دور کے اشتہارات کے 8 اَرب روپے کی رقم ابھی تک ادا نہیں کی گئی ہے جس کی وجہ سے بعض شہروں سے چھپنے والے اخبارات کو مکمل بند کردیا گیا ہے اور ملازمین کو اسی وجہ سے نکالا جا رہا ہے۔ اگر دیکھا جائے تو ان اخبارات کے مالکان کھرب پتی ہیں۔ اس کے باوجود چند ہزار روپے کے عوض کام کرنے والے محنت کشوں کی تنخواہ کو برداشت نہیں کر سکتے۔ اصل میں یہ سب کچھ بلیک میلنگ اور اپنی لوٹ کھسوٹ و اجارہ داری کے لیے کیا جارہا ہے۔ جو غریب محنت کشوں کے ساتھ ظلم اور انصافی ہے۔ پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپین اخبارات کے مالکان کی مزدور دشمنی کو سختی سے مذمت کرتی ہے۔ حکومت سے مطالبہ کرتی ہے کہ اخبار مالکان کے خلاف نوٹس لیں۔ جن مزدوروں کو برطرف کیا گیا ہے انہیں نوکریوں پر بحال کیا جائے۔

پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین (PTUDC) اخباری صنعت سے وابستہ مزدوروں کے لیے ہر فورم پر آواز بلند کرے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*