سکھر : یوم مئی کے موقع پر مزدور ریلی و جلسہ

رپورٹ:  پی ٹی یو ڈی سی سکھر

سکھر میں یوم مئی محنت کشوں کا عالمی دن پورے جوش و جذبے سے منایا گیا۔ مرکزی ریلی حرا میڈیکل کمپلیکس سکھر سے نکالی گئی جس کا انعقاد پاک ہائیڈرو الیکٹرک یونین اور ورکرز کنفیڈریشن کی جانب سے کیا گیا تھا۔ جس میں پاکستان موٹرورکس ایسوسی ایشن سکھر، سندھ پیرا میڈیکل اسٹاف سکھر، پاکستان ورکرز فیڈریشن، ریلوے مزدوریونین، ایریگیشن یونین، CBA یونین پی ٹی سی ایل، میونسپل لیبر یونین، سوئی گیس یونین اور پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین نے شرکت کی۔  ریلی تیر چوک اور بیراج روڈ سے ہوتے ہوئی گھنٹہ گھر پر پہنچ کر جلسے میں تبدیل ہوگئی جس سے شریک یونین کے نمائندوں نے خطاب کرتے ہوئے نجکاری کو عالمی سامراج کی محنت کشوں کے خلاف سازش قرار دیا۔  
تمام لیبر یونینز کی قیادت نے پیپلز پارٹی کی صوبائی اور علاقائی قیادت کو سخت ترین تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ جس پیپلز پارٹی کا نعرہ ہی روٹی کپڑا اور مکان تھا وہ ہی مزدوروں کے منہ سے نوالہ چھین رہی ہے۔  تمام یونینز کی قیادت نے اس عزم کا اظہار کیا کہ اگر کسی بھی ادارے میں محنت کشوں کے ساتھ زیادتی ہوئی تو تمام یونینز مل کر احتجاج کریں گی۔  جلسے میں محنت کشوں کی کم از کم اجرت ایک تولہ سونے کے برابر کرنے کی قراردادپیش کی گئی جسے جلسے میں موجود تمام محنت کشوں نے جوش و خروش کے ساتھ منظور کیا۔

 PTUDC کے کامریڈ سعید خاصخیلی نے انتہائی جامع انداز میں عالمی سرمایہ دارانہ نطام کی خامیوں کی نشاندہی کی اور ساتھ ہی پاکستان میں موجودہ سرمایہ داروں کی حکومت کی مزدور دشمن پالیسیوں کی نشاندہی کی۔