اسلام آباد: نجکاری اور مزدور دشمن پالیسیوں کے خلاف ملک گیر تحریک کا اعلان

رپورٹ: مرکزی انفارمیشن بیورو

پی ٹی آئی کی حکومت کے جانب سے ملکی تاریخ کے بدترین نجکاری پروگرام پر بڑے وحشیانہ طریقے سے عمل درآمد کرنے کا اعلان کر دیا ہے جس میں ملک کے تمام اہم عوامی اداروں کو نیلام کر دیا جائے گا۔ مزدور جدوجہد کو کچلنے کے لئے کئی اداروں میں لازمی سروسز ایکٹ نافذ کیا جا چکا ہے اس کے ساتھ ٹریڈ یونینز پر غیر اعلانیہ پابند ی عائد ہے۔ اس صورتحال میں ان مزدور دشمن پالیسیوں کے خلاف جدوجہد کا لائحہ عمل تیار کرنے کے لئے پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین (PTUDC) کی مرکزی باڈی کا مشاورتی اجلاس مورخہ 10مارچ 2019ء کو اسلام آباد میں ہوا۔ جس میں مرکزی عہدے داران سمیت ملک بھر سے صوبائی اور ضلعی عہدے داران نے بھی شرکت کی۔

اجلاس کے دوران نجکاری پالیسی ، مزدور جدوجہد اور مستقبل کے لائحہ عمل پر سیر حاصل بحث کی گئی۔ اجلاس کی صدارت چیئرمینPTUDC نذر مینگل نے کی جبکہ میزبانی کے فرائض نائب صدر چنگیز ملک نے ادا کئے۔اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کا اہتمام کیا گیا، جس میں گفتگو کرتے ہوئے مرکزی رہنماؤں نے کہا کہ اس وقت ٹریڈ یونین تحریک اپنے مشکل دور سے گزر رہی ہے، ملک میں جاری معاشی بحران کا بوجھ محنت کش طبقے پر ڈالا جا رہا ہے۔ مہنگائی، بیروزگاری اور غربت میں مسلسل اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ دوسری جانب دیکھا جائے تو محنت کشوں کی جدوجہد کو کچلا جا رہا ہے۔ ہم سمجھتے ہیں کہ جدوجہد ہی واحد راستہ ہے اس سلسلے میں PTUDC نے ان مزدور دشمن پالیسیوں کے خلاف ملک گیر تحریک چلانے کا اعلان کیا ہے۔ نجکاری کے خلاف وائٹ پیپر شائع کیا جا چکا ہے، نجکاری کے خلاف موثر جدوجہد کے لئے تمام ٹریڈ یونینز کے ساتھ ملک کر لیبر کانفرنسز، سیمینارز اور مظاہرے منعقد کئے جائیں گے۔ اس سلسلے پہلے مرحلے میں رحیم یار خان، دادو، کراچی میں رواں ماہ ہی لیبر کانفرنسز کا انعقا د کیا جائے گا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم پورٹ قاسم کے گودی محنت کشوں کی حالیہ لازوال جدوجہد کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں اور ان کے ساتھ مکمل اظہار یکجہتی کا اعلان کرتے ہیں۔ ساتھ ہی ملک بھر میں مزدور رابطہ مہم شروع کی جائے گی، جس کا مقصد تمام محنت کشوں کو جوڑتے ہوئے مزدور دشمن قوتوں کے خلاف جدوجہد تیز کرنا ہے۔ محنت کشوں اور ٹریڈ یونین کے مطالبات کو قرارداد کی شکل دے کر پارلیمنٹ میں پیش کروائی جائے گی۔

ہم سمجھتے ہیں کہ موجودہ صورتحال میں متحد ہو کر ہی حکمران طبقے کو شکست دے جا سکتی ہے جس کے لئے تمام ترقی پسند قوتوں اور محنت کشوں سے پر زور اپیل کی جاتی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*