کوئٹہ: پی ٹی وی، پی آئی اے اور سٹیٹ لائف پر شب خون

رپورٹ: PTUDC کوئٹہ

تحریک انصاف کی حکومت کے دنوں میں جوں جوں اضافہ ہورہا ہے توں توں ان کا اصل چہرہ محنت کشوں کے سامنے عیاں ہو رہا ہے۔ مدینہ کی فلاحی ریاست اور پچاس لاکھ گھروں کی تعمیر، ایک کروڑ نوکریوں کی فراہمی اور بھیک نہ مانگنے کے تمام تر دعوے ہوا ہوچکے ہیں۔ اپنے انتخابی منشور سے روگردانی کرتے ہوئے ایک بار پھر سابقہ حکومتوں کی طرح اپنی تمام تر پالیسیاں سامراجی مالیاتی اداروں آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک کے احکامات کے مطابق ترتیب دیتے دکھائے دیتے ہیں۔ حکومت روزانہ 15اَرب روپے کے قرضے لے رہی ہے۔ عالمی مالیاتی اداروں کے احکامات پر گیس اور بجلی کی قیمتوں میں آئے روز اضافہ کیا جا رہا ہے۔ ایک سال میں تیسرا بجٹ پیش کیا گیا جس میں سرمایہ داروں کے مفادات کو تقویت دی گئی اور محنت کشوں اور عوام کو مکمل نظرانداز کیا گیا۔ قومی اداروں کی لوٹ سیل اور نجکاری کے لیے تیاریاں کی جارہی ہیں۔ نجکاری کرنے کے لیے ٹریڈ یونین پر قدغن لگانے کے لیے لازمی سروس ایکٹ لایا جا رہا ہے تاکہ کہیں سے کسی طرح کی بھی مزاحمت نہ ہو جس کا واضح ثبوت اسٹیٹ لائف انشورنس ہے جہاں لازمی سروس ایکٹ نافذ کرکے چھانٹیاں کی جارہی ہیں۔ سیلز منیجروں کی پوسٹیں ختم کی جارہی ہیں۔ جس کے خلاف پورے پاکستان میں اسٹیٹ لائف یونین نے کام چھوڑ دیا ہے اور سراپا احتجاج ہیں۔

اسی طرح پی ٹی وی کو خسارے کے نام پر بند کرنے کا منصوبہ ہے۔ قومی ایئرلائن پی آئی اے میں حکومت نے PAF کے حاضر سروس افسروں کو تعینات کیا ہے، جنہوں نے پی آئی اے کے اسلام آباد آفس کا کام سنبھال لیا ہے جنہوں نے ادارے میں آمریت مسلط کردیا ہے۔ عمران خان کی حکومت دیگر قومی اداروں میں بھی آرمی افسران کو اعلیٰ عہدوں پر تعینات کرنا چاہتے ہیں تاکہ آنے والے دنوں میں نجکاری کے عمل کو مزید تیز کیا جاسکے۔ جس کا آغاز اسٹیٹ لائف انشورنس، پی ٹی وی او ر پی آئی اے سے کردیا گیا ہے۔

اسی طرح پاکستان پوسٹ آفس کی کھربوں روپے کی زمینوں کو لیز پر دینے کا اصولی فیصلہ کرلیا گیا ہے۔ ایسے میں ان اداروں کے محنت کشوں اور ان کی قیادت پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ حکمران طبقے کے ان ظالمانہ پالیسیوں کے خلاف کمربستہ ہوکر نجکاری اور دیگر سامراجی نسخوں کو شکست دینے کے لیے ملک گیر سطح پر تحریک چلائیں۔ بصورت دیگر حکمران طبقہ اپنی لوٹ مار کے لیے ان تمام اداروں کو نگل لیں گے۔ پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDC موجودہ حکمرانوں کی سامراجی اداروں کی دلالی اور ان کی پالیسیوں کی شدید مذمت کرتی ہے۔ اس ضمن میں پی ٹی یو ڈی سی نے رابطوں اور میٹنگوں کا سلسلہ شروع کیا ہے تاکہ محنت کشوں کو حکمرانوں کے ان پالیسیوں کے حوالے سے آگاہی دی جاسکے۔ مرکزی قیادت نے کوئٹہ بلوچستان میں پی آئی اے، پی ٹی وی، واپڈا، اسٹیٹ لائف کے یونین عہدیداروں سے ملاقاتیں کی ہیں اور ایک مشترکہ میٹنگ بلانے کا عزم کیا گیا ہے تاکہ اس حوالے سے مشترکہ لائحہ عمل ترتیب دی جاسکے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*