کراچی، دادو، خیر پورمیرس اور کے این شاہ میں آٹے کے مصنوعی بحران اور مہنگائی کے خلاف احتجاج

کراچی

کراچی میں پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDC اور انقلابی طلبا محاذ RSFکے زیر اہتمام مہنگے آٹا اور چینی کے بحران، مہنگائی اور حکمرانوں کی عوام دشمن پالیسیوں کے خلاف مورخہ 26جنوری کو ایمرپس مارکیٹ کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کا انعقاد کیا گیا۔ مظاہرے کے دوران حکمرانوں کی عوام دشمن پالیسیوں کے خلاف سخت نعرے بازی کی گئی۔

مظاہرے سے خطا ب کرتے ہوئے PTUDC کے رہنماؤں ڈاکٹر حسیب، جنت حسین، نذر عالم اور ماجد میمن نے کہا کہ آٹا اور چینی کا موجودہ بحران حکمرانوں کی جانب سے پیدا کیا گیا ہے جس کا مقصد محض منافعوں میں اضافہ ہے، موجودہ سرمایہ دارانہ نظام کی بنیاد ہی منافع ہے جس کے خلاف جدوجہد ناگزیر عمل ہے۔

دادو
دادو میں پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDC اور بیروزگار نوجوان تحریکBNT کی جانب سے مہنگے آٹا اور چینی کے بحران، مہنگائی اور بیروزگاری کے خلاف میونسپل پارک سے پریس کلب تک ریلی نکالی گئی۔ ریلی میں آٹا مہنگا ہائے، چینی مہنگی ہائے ہائے، علاج مہنگا ہائے کے فلک شگاف نعرے لگائے گئے۔ ریلی میں مختلف ٹریڈ یونین تنظیموں کے نمائندوں نے بھی شرکت کی جس میں ہائی ویز لیبر یونین سرفہرست تھی۔احتجاجی مظاہرہ جب دادو پریس کلب پہنچا تو ایک جلسہ کی شکل اختیا کر گیا۔ جس کی چیئر کے فرائض کامریڈ سجاد جمالی نے سرانجام دیے۔ جلسہ سے BNTکے حنیف مصرانی، اعجاز بگھیو اورPTUDc دادو کے صدر کامریڈ موریل پنہور نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ یہ سندھ سے لے کے پورے ملک کی ساری اقتدار میں براجمان سیاسی جماعتوں کی ناکامی ہے جس کی و جہ سے یہ بحران پیدا ہوا ہے صرف اپنے منافعوں کی خاطر سستا آٹا ایکسپورٹ کرکے پھر مہنگا آٹا امپورٹ کیا جارہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ اشیا خوردنوش کے بحرانات سرمایہ دارانہ نظام اور ان کے رکھوالے سرمایہ داروں کی پیداوار ہیں اور جب تک یہ نظام چلتا رہے گا تب تک غریب عوام مہنگائی، بیروزگاری اور لاعلاجی کا شکار ہوتا رہے گا۔

 خیرپور میرس
آٹے اور چینی کے مصنوعی بحران اور ملک میں بڑھتی مہنگائی کے خلافPTUDC کی جانب سے ملک گیر احتجاجات کی کال پر یونائٹیڈ لیبر فیڈریشن، ایگریکلچر ایکسٹینشن ورکرز یونین، ٹمبر مارکیٹ اینڈآرا مشین ورکرز ایسوسی ایشن، مہران فرنیچر ورکرز ایسوسی ایشن، الشہباز بلڈنگ پینٹ ورکرز یونین، کنسٹرکشن لیبر یونین اور دوسری تنظیموں کے تعاون سے آج مورخہ 26جنوری 2020ء کو پھول باغ سے پنج گلا چوک تک ریلی نکالی گئی جس میں مختلف تنظیموں کے ارکان، عہدیداران، مزدور، صحافی اور طلباء نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔


یہ ریلی کامریڈ سعید خاصخیلی، امجد لاشاری، اعجاز عباسی، فاتح میرانی، مختیار خمیسانی، گلزار کھجڑ، علی گل عباسی، شاہد چنا، محمد بخش سیال، استاد امان اللہ شیخ، میاں غلام حسین، بشیر جونیجو، عارب کھوسو اور دیگر کی قیادت میں نکالی گئی۔ شرکا سے خطاب کرتے ہوئے مقررین کا کہنا تھا کہ حکمران مزدور، ہاری، طلبااور محنت کشوں کے نعروں سے اقتدارحاصل کرنے کے بعد دھوکے سے ان کا خون چوستے ہیں۔ حکمرانوں نے آٹا، بجلی، گیس سمیت تمام بنیادی اشیا خوردنوش مہنگی کرکے عوام سے جینے کا حق چھین لیا ہے۔ حکمران مزدوروں کا سفاکی سے استحصال کررہے ہیں، اگر حکمرانوں نے سرمایہ داروں کی حمایت ختم نہیں کی تو محنت کش روڈوں پر نکل آئیں گے اور ایوانوں کو لرزا دینگے۔

خیر پور ناتھن شاہ 
خیر پور ناتھن شاہ میں 22جنوری کو بڑھتی ہوئی مہنگائی اورآٹے کے بحران پر PTUDCاور BNTکی جانب سے احتجاجی مظاہرہ منعقد کیا گیا جس میں بڑی تعداد میں مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی اور اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے مقررین نے حکمرانوں کی عوام دشمن پالیسیوں پر سخت تنقید کرتے ہوئے سرمایہ داری نظام کے خلاف جدوجہد تیز کرنے پر زور دیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*