سیالکوٹ: سانحہ ساہیوال ور یاستی دہشت گردی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ

رپورٹ: ناصر بٹ

نقیب اللہ شہید کے ماورائے عدالت قتل کے ایک سال بعد سانحہ ساہیوال جیسا دلخراش واقعہ پیش آیا جس میں ریاست نے نہتے اور بے قصور افراد کو دن دہاڑے موت کے گھاٹ اتار دیا۔ اس سانحہ کے بعد ریاستی اداروں کی جانب سے اس سانحہ کے محرکات پر پردہ ڈالنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔ لیکن لواحقین اور زندہ بچ جانے والے بچوں کے بیانات نے اس واقعہ کی اصلیت سے پردہ اٹھایا۔ نقیب اللہ محسود کی طرح اس واقعہ میں بھی ریاستی دہشت گردی نے ریاست کی اصل حقیقت واضح کی۔

اس ریاستی دہشت گردی کے خلاف پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDCکی جانب سے مورخہ 22جنوری کو پریس کلب سیالکوٹ تا علامہ اقبال چوک تک احتجاجی ریلی اور مظاہرے کا انعقاد کیا گیا۔ اس مظاہرے میں مختلف شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی اور واقعہ کی سخت الفاظ میں مذمت کی ۔ مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ریاستی دہشت گردی ایک ناسور بن چکا ہے ، اس صورتحال میں پوری ریاست معصوموں کا قتل عام کرنے میں مگن ہے جبکہ دوسری جانب راؤانوار، احسان اللہ احسان اور دیگر دہشت گردوں کو وی آئی پی پروٹوکول دیا جا رہا ہے جس کی ہم سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہیں۔ حکومت کی جانب سے انصاف مہیا کرنے کے دعوے محض دھوکہ بازی کے سوا کچھ نہیں۔ ہمیں متحد ہو کر اس نظام کے خلا ف جدوجہد تیز کرنا ہو گی۔ مظاہرے کے دوران مطالبات کے حق اور واقعہ کی مذمت میں نعرے بازی کی گئی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*