ملتان، جام پور اور سیالکوٹ میں اسٹیل ملز کی نجکاری اور جبری برطرفیوں کے خلاف احتجاجی مظاہرے

پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDC کے زیر اہتمام آئی ایم ایف کی پالیسیوں، عوامی اداروں کی نجکاری اور پاکستان اسٹیل ملز سے جبری برطرفیوں کے خلاف ملک گیر احتجاجات کا سلسلہ جاری ہے، اس سلسلے میں مورخہ 19 دسمبر کو ملتان، جام پور اور سیالکوٹ میں ہونے والے احتجاجات کی رپورٹس ذیل میں شائع کی جا رہی ہیں۔

ملتان

رپورٹ: PTUDC ملتان

پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDC ملتان کے زیراہتمام نجکاری، آئی ایم ایف، اسٹیل ملز کے پانچ ہزار سے زائد ملازمین کی جبری برطرفیوں، ایم ٹی آئی، پی ایم سی ایکٹ اور ایم این اے علی وزیر کی گرفتاری کے خلاف کچہری چوک ملتان احتجاجی مظاہرہ کیا گیا۔ مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے ندیم پاشا ایڈووکیٹ آرگنائزر PTUDC ملتان، احد شاہ کھگہ ایڈووکیٹ،عمران انصاری ایڈووکیٹ نائب صدر پیپلز پارٹی ملتان شہر، رانا نیک محمد زاہد مرکزی رہنما پاکستان پیپلزپارٹی، راشد خان رہنما پی ٹی سی ایل، کامریڈ اسلم انصاری رہنما پاور لومز ایسوسی ایشن، ذیشان بٹ آرگنائزرانقلابی طلبہ محاذ ملتان، کامریڈ یامین، شاہ ولی راجپوت رہنما واسا ملتان اور دیگر مقررین نے کہا کہ حکمران ٹولہ آئی ایم ایف کی مالیاتی پالیسیوں کو پورے جبر وطاقت کے ساتھ مسلط کر رہا ہے۔

اسٹیل ملز کے پانچ ہزار محنت کشوں کو جبری طور پر برطرف کر دیا گیا ہے۔ پی آئی اے سے وی ایس ایس کے نام پر ہزاروں ملازمین کو برطرف کرنے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔ نجکاری پالیسی سے تعلیم اورعلاج کو کاروبار بنا دیا گیا ہے۔ قومی اداروں کو بیچ کر محنت کشوں کو زندہ درگور کر رہے اور بے روزگاری کی دلدل میں دھکیل دیا گیا ہے۔ حکمرانوں کی ان عوام اور مزدور دشمن پالیسیوں کے خلاف احتجاج کا دائرہ بڑھایا جائےگا۔

مقررین نے مطالبہ کیا کہ نجکاری پالیسی کو فوراً ختم کیا جائے۔ اسٹیل ملز کے محنت کشوں کی برطرفیاں ختم کی جائیں اور فوری طور پر ملازمتوں پر بحال کیا جائے۔ ایم ٹی آئی اور پی ایم سی ایکٹ کا خاتمہ کیا جائے۔ ایم این اے علی وزیر کو فوراً رہا کیا جائے۔ احتجاجی مظاہرے میں احمد سلہری، چوہدری علی ممتازایڈووکیٹ، سید اشتیاق شاہ، ارقم بھٹہ،موید الحسنین، چوہدری لیاقت سوروایڈووکیٹس، شاہ زیب خان، ارشد خان چغتائی، جنید دادا اور دیگر نے شرکت کی اور عوام دشمن ،مزدور دشمن پالیسیوں کے خلاف بھر پور جدوجہد وسیع کرنے اور حتمی فتح سوشلسٹ انقلاب تک جدوجہد جاری رکھنے کا اعادہ کیا۔

 

جام پور
رپورٹ: سقراط لُنڈ

 ملک بھر کے مختلف شہروں کی طرح جام پورمیں بھی PTUDC کے زیراہتمام پاکستان اسٹیل ملزکراچی کی نجکاری اور ملازمین کی برطرفیوں کے خلاف کچہری جامپورسے ٹریفک چوک تک ایک احتجاجی ریلی نکالی گئی۔ احتجاجی ریلی کے شرکاء نے پینافلیکس اور پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے، جن پر نعرے درج تھے کہ پاکستان سٹیل ملز کی نجکاری نامنظور، برطرف ملازمین کو بحال کرو، اسٹیل مل کی تباہی کے ذمہ دار سول اور ملٹری بیوروکریسی ہے ملازمین نہیں۔ مزدور دشمن ہر دستور نامنظور، سٹیل ملز کی نجکاری، آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک کے ایجنڈے کی غلامی کے تحت ہو رہی ہے۔

ریلی کی قیادت کامریڈ رؤف لُنڈ اور کامریڈ شہریار ذؤق نے کی، جبکہ شرکاء میں عرفان پتافی، عبدالکریم محسن، سچل سرمست، خوشحال بزدار، مسعود شبیر، حمزہ بھٹی، جعفر شاہ، باسط سومرو، جعفر احمدانی، ظفر احمدانی اور کامریڈ سُقراط لُنڈ شامل تھے۔

سیالکوٹ

رپورٹ: ایاز

پاکستان اسٹیل ملز کے ملازمین کی جبری برطرفیوں اور نجکاری کے خلاف سیالکوٹ ڈپٹی کمشنر آفس کے سامنے PTUDC کے زیر اہتمام احتجاجی مظاہرے کا انعقاد کیا گیا, جس میں ایپکا پنجاب، آل پاکستان کلاس فورایسوسی ایشن، پی ٹی سی ایل پنشنرز، محنت کشوں، وکلاء اور نوجوانوں نے شرکت کی۔ مظاہرین نے آئی ایم ایف کی پالیسیوں اور اسٹیل ملز سے جبری برطرفیوں کے خلاف سخت نعرہ بازی کی۔

شرکا سے خطاب کرتے ہوئے PTUDC سیالکوٹ کے ضلعی صدر ناصر بٹ، انقلابی طلبہ محاذ کے آرگنائزر ایاز ٹپو، ریاض قادری صوبائی صدر اپکفا پنجاب، محمد توقیر مرکزی رہنما پی ٹی سی ایل پنشنرز، چوہدری اظہرحسن پیپلزپارٹی ضلع سیالکوٹ،  ملک حسن ٹکٹ ہولڈر پیپلزپارٹی، وحید بخاری ایڈووکیٹ، حسنین اور دیگر نے پی ٹی آئی کی حکومت کی پالیسیوں پر سخت تنقید کرتے ہوئے، سرمایہ دارانہ نظام کے خلاف جدوجہد تیز کرنے کے عزم کا عیادہ کیا۔