لاہور: آئی ایم ایف کی معاشی پالیسیوں کے خلاف سینکڑوں محنت کشوں کی احتجاجی ریلی

رپورٹ: PTUDC لاہور

پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDC کے زیر اہتمام مورخہ 13مارچ کو ایوان اقبال تا پریس کلب تک آئی ایم ایف کی معاشی پالیسیوں، مہنگائی، نجکاری اور عوام پر بدتریج حکومتی معاشی حملوں کے خلاف احتجاجی ریلی نکالی گئی۔ احتجاجی ریلی میں PTUDC کی مرکزی کابینہ سمیت پاکستان اسٹیل ملز، نادرا پاکستان، پاکستان ریلوے، پی آئی اے، واپڈا، اگیگا، آل پاکستان ایمپلائز، پنشنرز اینڈ لیبر تحریک، پاور لومز، سپورٹس و سرجیکل فیکٹریوں، اتحاد کیمیکلز، ٹیکسٹائل، ایپکا پاکستان، جرنلسٹس، انقلابی طلبہ محاذRSF، جموں کشمیر نیشنل سٹوڈنٹس فیڈریشنJKNSF، پختون سٹوڈنٹس فیڈریشن، قراقرم سٹوڈنٹس فیڈریشن سمیت مختلف اداروں کے محنت کشوں، خواتین اور طلبا کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ ریلی میں عوامی ورکرز پارٹی کی فیڈرل وویمن سیکرٹری فرزانہ باری، گلگت و بلستان کے عوامی انقلابی رہنما بابا جا ن اور بیرون ملک سے ارجینٹائن کی سب سے بڑی بائیں بازو کی قوت ایم ایس ٹی کی پارٹی لیڈر سیلے فیریرو، انٹرنیشنل سوشلسٹ لیگ کے الیڈرو بوڈارٹ اور ترکی کی سوشلسٹ لیبر پارٹی کے ووکان ارسلان نے بھی شرکت کی۔

</p

ریلی کے دوران آئی ایم ایف کی پالیسیوں کے خلاف سخت نعرے بازی کی گئی، ریلی مختلف راستوں سے گزرتی ہوئی پریس کلب پر اختتام پذیر ہوئی جہاں اس نے جلسہ عام کی شکل اختیار کر لی۔ ا س موقع پر PTUDCکے مرکزی چیئرمین نذر مینگل، جنرل سیکرٹری قمر الزمان خان، نادرا بحالی تحریک کے رہنما رضا سواتی، سٹیل ملز پاکستان سے اکبر میمن، PTUDCسندھ کے شہباز، عوامی ورکرز پارٹی کی فرزانہ باری اور دیگر رہنماؤں نے خطاب کرتے ہوئے آئی ایم ایف معاشی پالیسیوں کی سخت مذمت کی اور کہا کہ آئی ایم ایف اور دیگر عالمی سامراجی مالیاتی اداروں کی غلامی سے نکلنے کا واحد راستہ سامراجی قرضوں کی ضبطگی ہے۔ پاکستان کا حکمران طبقہ ان سامراجی اداروں کا غلام ہے اور ان کے خلاف فیصلہ کن لڑائی لڑنے سے قاصر ہے لہٰذا یہ وقت کی اہم ضرورت ہے کہ آئی ایم ایف کی پالیسیوں کے خلاف محنت کش میدان عمل میں اتریں اور سرمایہ داری کو جڑ سے اکھاڑتے ہوئے یہاں ایک سوشلسٹ انقلاب برپا کریں۔ سوشلسٹ انقلاب کے ذریعے ہی ہم آئی ایم ایف کی غلامی سے حقیقی طور پر آزادی حاصل کرسکتے ہیں۔