’گوادر میں مزدوروں کا قتل عام کھلی بربریت ہے‘ ، پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین

رپورٹ: عمر شاہد (سیکرٹری اطلاعات PTUDC)

گوادر میں مزدوروں کا قتل عام کھلی بربریت ہے اور قاتل بلوچ کاز کے دشمن ہیں۔ بلوچستان حکومت اور قانون نافذ کرنے والے ادارے مزدوروں کو تحفظ دینے میں ناکام ہوگئے ہیں۔ مزدوروں کو تحفظ مہیا کیا جائے۔ پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین (PTUDC) گوادر میں دومختلف واقعات میں 10 مزدوروں کے قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے طبقاتی دہشت گردی قرار دیتی ہے۔ پی ٹی یو ڈی سی کے مرکزی صدر نذرمینگل، سینئر نائب صدر غفران احد، سیکرٹری جنرل قمرالزماں خاں، جوائنٹ سیکریٹری چنگیز ملک اور فنانس سیکریٹری ماجد میمن سمیت تمام مرکزی قیادت نے بلوچستان میں مختلف صوبوں سے آکر کام کرنے والے مزدوروں پرمسلسل ہونے والے قاتلانہ حملوں اور اسکے نتیجے میں درجنوں ہلاکتوں پر شدید احتجاج کرتے ہوئے کہا ہے کہ پے درپے خونی واقعات بلوچستان حکومت اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی مجرمانہ غفلت کا نتیجہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کے تمام وسائل صرف حکمران طبقات کی حفاظت کیلئے خرچ کئے جاتے ہیں اور محنت کش طبقے کو سراسر فراموش کردیا جاتا ہے۔ مزدور اپنے علاقوں میں بھوک سے مر رہے ہیں اور جہاں کام کا موقع میسر آتا ہے وہاں دہشت گردی اور حفاظتی اقدامات کے فقدان کا شکار ہوکر اپنی جان سے ہاتھ دھونا پڑتا ہے۔انہوں نے کہا کہ دوسرے صوبوں اور قوموں کے مزدوروں کا قتل عام بلوچستان کے محکوم اور مظلوم عوام کے حقوق کی جدوجہد کو سبوتاژ کرنیکی گھناؤنی سازش ہے جس میں حکمران طبقات خود ملوث ہیں۔ قومی اور لسانی بنیادوں پر قتل عام کرنے والے اپنی قوم کے محکوم عوام اور محنت کشوں کے سب سے بڑے دشمن ہیں۔ دوسری قوموں کے مزدوروں پر قاتلانہ حملے مزدوروں کی طبقاتی یکجہتی کو ناقابل تلافی نقصان پہنچارہے ہیں جس سے قومی حقوق کی تحریک کمزور اور تنہا ہو رہی ہے۔ پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین ان حملوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے متعلقہ حکام سمیت قتل وغارت گری کے تمام واقعات کے ذمہ داران کو قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہ کرتی ہے۔

Comments are closed.