راولاکوٹ: سینیٹری ورکرز کی ہڑتال موخر

رپورٹ: اویس

راولاکوٹ میں ایک ہفتہ سے جاری سینیٹری ورکرز کی کام چھوڑ ہڑتال وزیر بلدیات کی یقین دہانی پر 20 جون تک موخرکر دی گئی۔ میونسپل ورکرز یونین نے  اپنے مطالبات کی منظوری کےلئے ایک ہفتہ تک راولاکوٹ میں احتجاجی دھرنا دیا۔ دھرنے میں پاکستان ٹریڈ یونین ڈیفنس کمپئین PTUDC کے وفد نے بھی شرکت کی اور سینیٹری ورکرز کے تمام تر مطالبات کی غیر مشروط حمایت کی اور مطالبات کی منظوری تک میونسپل ورکرز یونین کے ساتھ مل کر لڑائی لڑنے کے عزم کا اظہار کیا۔

مطالبات:
1۔ تمام عارضی ورکرز کو مستقل کرتے ہوئے اب تک کی سروس کو شامل کیا جائے۔
2۔ ورکرز کی کم سے کم اجرت کو 25000 روپے کیا جائے۔
3۔ ورکرز کو خفاظتی کٹس مہیا کی جائیں۔
4۔ میونسپل ورکرز کا سروس سٹرکچر بنایا جائے اور پروموشن پالیسی واضح کی جائے۔